Home / Urdu Poetry

Urdu Poetry

MAAN NE POOCHA RAAT KE IS PEHR BAHIR BETHI KIA KER RAHI HU ?

رات کے اس پہر باہر اکیلی کیوں بیٹھی ہو؟ کچھ نہیں اماں پر دل بوجھل سا ہے نیند نہیں آ رہی، کیا ہوا میری شہزادی کو؟ اماں ایک بات پوچھوں ؟ جی میری بیٹی اماں کبھی کبھی دل کی دھڑکنیں بے ترتیب کیوں ہوجاتی ہیں؟ ایسا کیوں لگتا ہے جیسے …

Read More »

Sunday I Itni GumSum Lion Hai ?

زندگی اتنی گم صم کیوں ہے؟؟؟ کبھی کبھی انسان اپنی ذات سے ہی تنگ آ جائے، تو اسے اپنا وجود ہی کائنات پر بوجھ محسوس ہونے لگتا ہے۔ ایسے میں کوئی خوشی کوئی دکھ متاثر نہیں کرتا، آنکھیں خشک سیلاب بن کر ویران ہو جاتی ہیں ،سوچ کے دریچوں پر …

Read More »

Pardes Ke Dukh

جو گھر سے دور ہوتے ہیں بہت مجبور ہوتے ہیں کبھی باغوں میں سوتے ہیں کبھی چھپ چھپ کے روتے ہیں گھروں کو یاد کرتے ہیں تو پھر فریاد کرتے ہیں مگر جو بے سہارا ہوں گھروں سے بے کنارہ ہوں انہیں گھر کون دیتا ہے یہ خطرہ کون لیتا …

Read More »

Zakhmi Dil

پتا ہے سب سے زیادہ دل کو زخمی کیا چیز کرتی ہے؟ مانوس لہجوں کا بدل جانا جانا، پہچانی نگاہوں کا پھر جانا، اپنائیت کواجنبیت کا سفر طے کرتے دیکھنا۔۔۔ جو لوگ دوسروں کے دلوں کو کانٹوں سے زخمی کرتے ہیں ان کے اپنے اندر کیکر اگے ہوتے ہیں، وہ …

Read More »

Alfaz Ya Behktey Angarey

الفاظ جب تک ہماری دسترس میں ہیں ہم اس قابل ہیں کہ انہیں نکھار کے پھولوں سا معطر بنا دیں، یا جلتے انگارے کی شکل میں ڈھال دیں۔ لفظوں میں بہت تاثیر رکھی گئی ہے، یہ انسانوں کی زندگیوں کا رخ بدل دیتے ہیں۔مردہ دلوں کو زندہ اور زندہ دلوں …

Read More »

Ek Aaam Si Larki

میں ایک عام سی لڑکی ہوں مجھے گمنام رہنے دو سنو لڑکی ابھی تم عشق مت کرنا ابھی گڑیا سے کھیلو تم تمہاری عمر ہی کیا ہے فقط سترہ برس کی ہو ابھی معصوم بچی ہو نہیں معلوم ابھی تم کو کہ جب یہ عشق ہوتا ہے تو انسان کتنا …

Read More »

Gham Dukh aur Takleef

غم ایسی ماں ہے جو دو بچوں کو جنم دیتی ہے ۔ ایک بچہ خوشی اور دوسرا بچہ مایوسی۔ ایک بچہ آپ کو اللہ کے قریب کر دیتا ہے اور وہ بچہ ہے خوشی، اس چیز کی خوشی کہ آپ اللہ کی طرف سے غم کیلئے چنے گئے ہیں۔ اور …

Read More »

Larki Khilona Nhi Huti..

لڑکیاں کھلونا نہیں ہوتی والدین تو بس پیار سے گڑیا کہتے ہیں۔لڑکی ملکیت کے نہیں محبت کے حصار میں جینا پسند کرتی ہے ۔ کیسی نازک ہوتی ہے لڑکیاں چوڑی ٹوٹ جائے تو رو رو کے گھر سر پر اٹھا لیتی ہیں، دل ٹوٹ جائے تو سامنے بیٹھی ماں کو …

Read More »